banner_0.jpg

تعارف

پاکستان میں سلسلہ ادریسیہ کا باقاعدہ آغاز میں ہوا جب المحترم السیدی الشیخ الحافظ محمد امین بن عبدالرحمٰن اپنی زندگی کے چالیس سال مدینہ شریف میں گزارنے کے بعد پاکستان تشریف لائے۔ چند ہی سالوں میں پاکستان کے طول و عرض سے لاکھوں کی تعداد میں افراد جو تقریباً ہر طبقہ فکر سے تعلق رکھتے ہیں ، جوق در جوق محترم شیخ صاحب کے مکتبِ  فیضان سے فیض یاب ہورہے ہیں۔ ۱۹۹۵ میں محترم شیخ صاحب ملتان شریف تشریف لائے جہاں آج بھی A- ۳۸۱ شاہ رکن عالم کالونی میں موجود ہیں اور اب یہ سلسلہ ﷲ تعالیٰ  کی رضا اورآقا جی صَلی ﷲ علیہ وَسلم کے وسیلےسےمحترم شیخ صاحب کے نام سے تا قیامت چلتا رہے گا۔ اِنشاءﷲ ۔

وظائف میں پابندی اور لگن کی برکتیں

جو چاہتے ہیں کہ اُن پر خدا کا خاص کرم ہو تو وہ اِن وظائف کو خلوص نیت، شوق، لگن اور بغیر ناغہ کے پڑھیں۔ حدیث شریف کے مفہوم میں ہے کہ ﷲ تعالیٰ  کو وہ عمل پسند ہے جس میں ناغہ نہ ہو۔ جو ﷲ تعالیٰ  اور رسول پاک صلی ﷲ علیہ وسلم سے وفا کریں گے، اپنے تمام معاملات میں معجزات دیکھیں گے۔(انشاء ﷲ) دنیا آ خرت میں نبی کریم صلی ﷲ علیہ وسلم کی ضمانت کفالت میں رہیں گے۔ عشق رسول صلی ﷲ علیہ وسلم میں بہت تیزی ہوگی۔ رزق بارش کی طرح برسےگا، ناممکن مشکلات بھی انشاء ﷲ حل ہو جائیں گی۔